فلکیات »

January 9, 2013 – 3:49 am | ترمیم

عذاب ِیوم کے دن کی طوالت پچاس ہزار سال ۔ جدید سائنس کی روشنی میں

ستاروں کے چال چلن سے لوگ مستقبل کا حال بتاتے ہیں ۔ طرح طرح کے دل دہلانے والے انکشافات …

مزید پڑھیے »
ہم مسلمان کیسے ہوئے؟

کن سائنسی تحقیقات کے نتائج نے ہمیں اسلام کے متعلق سوچنے پر مجبور کیا اور پھر ہم مسلمان ہو گئے

صحت وتندرستی

انسانی صحت کے متعلقہ انٹرنیٹ پٔر شائع ہونے والے مفید مضامین پڑھیے

سائنسی خبریں

سائنسی شعبہ میں ہونے والی جدید ترین تحقیقات و انکشافات پر مشتمل مضامین پڑھیے

موسمیات

ہوا ، بادل ،پانی اور بارش کا آپس میں کیا تعلق ہے ؟ اللہ کی قدرت ان میں کیسے جلوہ گر ہے .

تمہید و ابتدائیہ

قرآن مجید کس طرح جمع ہوا ، کیا اسلام اور سائنس میں تضاد ہے ، وغیرہ مضامین کو شامل کیا گیا ہے۔

صفحہ اول » حالات حاضرہ

پاکستاینوں کی بے حسی اور غفلت پرلکھا،اوریا مقبول جان کایہ کالم ضرورپڑھیے ، کیا ہمیں واضح علامتوں کا انتظا ر ہے

کاتب نے – July 14, 2012 – کو شائع کیا 5 تبصرے

پاکستاینوں کی بے حسی اور غفلت پرلکھا،اوریا مقبول جان کایہ  کالم ضرورپڑھیے ، کیا ہمیں واضح علامتوں کا انتظا ر ہے

حیرت کی بات ہے کہ اس ملک میں بسنے والے اٹھارہ کروڑ لوگوں کے سامنے یہ حقیقت روز روشن کی طرح واضح ہے کہ وہ جس ملک میں رہتے ہیں ،اس کا سفر ڈھلوان کی سمت تیزی سے رواں دواں ہے ۔ ڈرائیور کی مہارت پر انہیں بالکل بھروسہ نہیں بلکہ یقین ہے کہ یہ بس کھائی کی جانب اسی کی غلطیوں سے لڑھکی ہے لیکن کمال کی بات ہے کہ کسی کے منہ پر نہ کلمہ طیبہ کا ورد ہے ،نہ گناہوں سے معافی اور او ر استغفار سے بھری التجائیں ہیں ،اگر چیخ وپکار بھی ہے تو وہ  اول تو محدود ہے یا پھر اپنے اپنے دکھ کی بات کرتے ہیں ۔

کتنے ہیں جو بولنے والوں کو یہ کہہ کر چپ کراتے ہیں کہ خاموش بیٹھو، ڈرائیور  کو پانچ سال کے لئے نوکری پر رکھا ہے اس سے پہلے اسے کوئی نہیں نکالے گا خوا ہ وہ بس کو تباہ وبرباد کیوں نہ کردے ۔ہم کس قدر بے حس ہیں ۔ اگر ہماری ذاتی بس ،کار، یا رکشا ہی کیوں نہ ہوتا ،ہم نے کسی ڈرائیور کو ایک ماہ کے لئے ہی کیوں نہ رکھا ہوتا، ہم اسے پہلی ہی غلطی پر کان پکڑ کرنوکری سے نکال دیتے لیکن آفرین ہے اٹھارہ کروڑ عوام پر جنہیں اس بات کا احساس تک نہ نہیں

پوسٹ کے متعلق اپنی رائے سے آگاہ کیجئے

ٹیگز: , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , ,

تبصروں کی تعداد: 5. »

تبصرہ لکھيں!

آپ کا يہاں تبصرہ کرنا ممکن ہے، يا پھر آپ اپنی سائٹ سے ٹٹریک بیک کریں اپنی سائیٹ سے. آپ کرسکتے ہیں Comments Feed بذریعہ ار ایس ایس.

اس موضوع پر تبصرہ فرمائيں اور سپام سے اسے محفوظ رکھيں آپ کے ہم نہايت شکر گزار ہيں...

آپ درج ذيل ٹيگز استعمال کرسکتے ہيں

<a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <s> <strike> <strong> 

یہ ایک گریویٹار اینیبلڈ ویب سائیٹ ہے۔ اپنا عالمی سطح پرتسلیم شدہ اوتار حاصل کرنے کے لیے رجسٹر کریں گریوٹار.